آزاد کشمیر میں مسلم لیگ (ن) سب سے مضبوط پارٹی ہے،اگر الیکشن چوری کرنے کی کوشش کی گئی تو اس کے سیریس نتائج بھگتنا پڑیں گے، مریم نواز
No image اسلام آباد(کشیر رپورٹ،6جولائی2021) پاکستان مسلم لیگ (ن) کی مرکزی رہنما مریم نواز نے کہا ہے کہ میاں محمد نواز شریف اور شہباز شریف نے مجھے آزاد کشمیر الیکشن کی انتخابی مہم کی ذمہ داری دی ہے،آزاد کشمیر الیکشن میں مسلم لیگ (ن) سب سے مضبوط پوزیشن میں ہے،' فری اینڈ فیئر' الیکشن اگر ہوئے تو اس میں شک و شبہے کی بات ہی نہیں کہ مسلم لیگ (ن) بھاری اکثریت سے جیتے گی،عوام کا اس سسٹم پر اعتماد نہیں ہے، رگگنگ ہوتی آئی ہے،اور ہم نے اس کے ثبوت بھی دیکھے ہیں،لوگ تحفظات کا شکار ہیں لیکن اس بات میں کوئی دو رائے نہیں ہے کہ مسلم لیگ (ن) آزاد کشمیر کے الیکشن میں سب سے زیادہ مضبوط پارٹی ہے، میں کل پرسوں وہاں جا رہی ہوں اور انشاء اللہ تعالی یہ بات آپ دیکھیں گے۔
مریم نواز نے منگل کو اسلام آباد میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے ' پی ٹی آئی ' کانام لئے بغیر کہا کہ جس پارٹی کی بنیاد ہی رگگنگ پہ آئی ہو ،جس کے اتنے بڑے بڑے ثبوت عوام کے سامنے آئے ہوں، ان الزامات کے پیچھے بڑے ثبوت ہیں جس کی یہ تردید نہیں کر سکتے، ڈسکہ الیکشن اس کی مثال ہے،جب آپ الیکشن کمیشن کے عملے کو اغوا کر کے لے جاتے ہیں،تو اس میں کیا گنجائش باقی رہ جاتی ہے اور پھر بھی آپ ہار جاتے ہیں، اور اگر آپ نے اس میں ( آزاد کشمیر میں ) ایسا کرنے کی کوشش کی تو اس کے بہت بہت دور تک اس کے نتائج ہوں گے ، اس لئے عوام اور ان کے منتخب نمائندوں کے راستے میں نہ آئیں ،الیکشن کو چوری کرنے کی کوشش نہ کریں، اگر ایسا کیا گیا تو اس کے بہت سیریس نتائج آپ کو بھگتنا پڑیں گے۔ انہوں نے کہا کہ صحافیوں کے منہ بند کرنے کے لئے جو کیا جا رہا ہے وہ بہت شرمناک ہے،چوائس صرف اور صرف عوام کی ہونی چاہئے، اسٹیبلشمنٹ کی چوائس کوئی معنی نہیں رکھتی،اسٹیبلشمنٹ کی چوائس جب عمران خان کی صورت عوام پر مسلط کی جاتی ہے تو اس کا نتیجہ آج پوری قوم نے دیکھ لیا ہے۔ایک سوال کے جواب میں مریم نواز نے کہا ہے اتنی قربانیوں نے بعد ان سے ڈیل نہیں کی جا سکتی جن کے خلاف ہماری جدوجہد ہے۔
واپس کریں