راجہ فاروق حیدر کا حریت آفس میں سید علی شاہ گیلانی کے تعذیتی ریفرنس سے خطاب
No image اسلام آباد۔2ستمبر2021(کشیر رپورٹ) سابق وزیراعظم آزادحکومت ریاست جموں وکشمیر و صدر مسلم لیگ ن آزاد جموں وکشمیر راجہ محمد فاروق حیدرخان نے سید علی گیلانی کے انتقال کو کشمیری قوم کے لیے عظیم سانحہ قراردیا ہے، سید علی گیلانی کشمیریوں کے نیلسن منڈیلا تھے جنہوں نے زندگی کا بیشتر حصہ جیل میں گزارا،گزشتہ کئی دہائیوں سے وہ نظر بند تھے ان کو علاج معالجے کی سہولیات بھی فراہم نہیں کی گئیں، کشمیری قوم آج دکھ اور کرب میں ہے۔ سید علی گیلانی ایک سوچ ایک نظریہ بن چکا ہے، سید علی گیلانی پوری قوم کے قائد اور مسلمہ راہنما تھے، دوران اسیری ان کی موت اورتدفین نے بھی ہندوستانی چہرے کو دنیا بھر میں بے نقاب کر دیا ہے، سید علی گیلانی نے انتہائی مشکل اورنامساعد حالات کا سامنا کیا اوراپنے نظریہ پر سمجھوتہ نہیں کیا۔ا راجہ فاروق حیدرخان نے کہ اب پوری کشمیری قوم کے متحد ہونے کا وقت ہے یہ ساری قیادت کا بھی امتحان ہے، تمام کشمیریوں کو رائے شماری کے نقطے پر متحد ہونا چاہیے۔
ان خیالات کا اظہار انہوں نے تحریک آزادی کشمیر کے قائد سید علی گیلانی کی وفات پر یہاں آل پارٹیز حریت کانفرنس کے سیکرٹریٹ میں تعزیتی ریفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ ریفرنس میں حریت رہنما سید عبد اللہ گیلانی، غلام محمد صفی، سید فیض نقشبندی سید یوسف نسیم، پرویز ایڈووکیٹ، محمد رفیق ڈار، محمود احمد ساغر، فاروق رحمانی،شیخ میاں مظفر،شیخ متین او دیگر حریت رہنماں کے علاوہ، سابق وزیر حکومت،، ممبراسمبلی حافظ احمد رضا قادری،سابق امیر جماعت اسلامی عبد الرشید ترابی، ممبر کشمیر کونسل سردار عبدالخالق وصی، سابق ڈی جی کشمیر لبریشن سیل فدا حسین کیانی، سابق پریس سیکرٹری راجہ محمد وسیم خان اورراجہ پرویز احمدخان نے شرکت کی۔
راجہ محمد فاروق حیدر خان نے ریفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ سید علی گیلانی روشنی کا مینار تھے۔ انہوں نے اپنی ساری زندگی ہندوستانی سنگینوں کے سایے تلے پاکستان زندہ باد، ہم پاکستانی ہے پاکستان ہمارا ہے کے نعرے لگائے، انہوں نے کہ پوری ریاست جموں و کشمیر کے وہ مسلمہ لیڈر تھے ان کی وفات تحریک کے لیے ناقابل تلافی نقصان ہے۔ سابق وزیراعظم راجہ محمد فاروق حیدرنے ہندوستانی افواج کی جانب سے سید علی گیلانی کی نماز جنازہ کی ادائیگی سے روکنے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ نماز جنازہ سے روکنا اور رات کی تاریکی میں زبردستی جنازہ دفنانے کا عمل انتہائی شرمناک اوربنیادی انسانی حقوق کی صریحا خلاف ورزی ہے۔ راجہ فاروق حیدر خان نے مسلم لیگ ن کے تمام کارکنان اور عہدے داران سے کہا کہ وہ سید علی گیلانی کی مختلف مقامات پر ہونے والے غائبانہ نماز جنازہ میں بھرپور عقیدت کے ساتھ شرکت کریں۔ حریت رہنماں نے سید علی گیلانی کی خدمات کو شاندار الفاظ میں خراج عقیدت پیش کیا۔
واپس کریں