سید علی شاہ گیلانی کی وفات پہ آزاد کشمیر اسمبلی کا خصوصی اجلاس
No image مظفرآباد 4ستمبر2021 (کشیر رپورٹ) کشمیر کے مقبول عام آزادی پسند رہنما سید علی شاہ گیلانی کو خراج عقیدت پیش کرنے کے لئے آزاد کشمیر اسمبلی کا خصوصی اجلاس منعقد ہوا۔وزیر اعظم آزاد کشمیرعبدالقیوم نیازی نے کہا کہ کشمیر کے معاملے پر ہم سب ایک ہیں۔ اپوزیشن کو ساتھ لیکر چلیں گے اور ملکر ہندوستان کی جارحیت اور ظلم و بربریت کو دنیا میں بے نقاب کریں گے۔
سابق وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر خان نے کہا کہ سید علی گیلانی کی تدفین کے موقعے پر روا رکھے جانا والا ہندوستان کا غیر انسانی اور ظالمانہ سلوک بنیادی انسانی حقوق کی سنگین خلاف ورزی ہے جس کا اقوام متحدہ سمیت عالمی اداروں کو سختی سے نوٹس لینا چاہے، راجہ فاروق حیدر خان نے کہا کہ سید علی گیلانی کی جلائی ہوئی شمع کو کشمیری آزادی کے حصول تک جلائے رکھیں گے ۔
اپوزیشن لیڈر چودھری لطیف اکبر نے کہا کہ اس اجلاس میں حکومت کی غیر سنجیدگی کی انتہا ہے اسمبلی میں نہ ہی سپیکر اور نہ ہی ڈپٹی سپیکر ہیں اسمبلی میں حکومتی بنچ خالی غیر سنجیدگی ظاہر ہوتی ہے یہ ریاست کوئی سڑکیں بنانا یا وزارتوں کے لیئے نہیں بنی تھی، اس ریاست کی کچھ ذمہ داری ہے، کشمیر لبریشن سیل سیاسی بھرتیوں کے لیئے نہیں ہے اس کو حکومتی نہیں ریاستی ادارہ بنایا جائے جس مقصد کے لیئے اس ادارہ کا قیام ہوا تحریک آزادی کوئی مذاق نہیں ہے کشمیر لبریشن سیل کو تحریک آزادی کے لیئے وقف ہونا چایئے حکومت پاکستان کو چائے تحریک آزادی پر توجہ دے پاکستان کی تمام سیاسی پارٹیوں کا اجلاس ہونا چاہیے ۔ حکومت پاکستان ایک پارلیمنٹ کے باہر غائبانہ نماز جنازہ پڑھ کر خاموش نہ ہو۔

واپس کریں