کونسل ارکان سے چیئر مین( وزیر اعظم پاکستان) کے بجائے وزیر امور کشمیر کا حلف لینا غیر آئینی اقدام ، چیئرمین کونسل کا حلف لینا'' ناقابل عمل '' نہ تھا
No image اسلام آباد (کشیر رپورٹ) آزاد جموں وکشمیر کونسل کے چار ارکان سے چیئر مین کونسل وزیر اعظم پاکستان عمران خان نے حلف لینے کے بجائے ان کا حلف وفاقی وزیر امور کشمیر و گلگت بلتستان علی امین گنڈا پور نے لیا۔ آزاد کشمیر کے آئین کے آرٹیکل(6)21 کے تحت کونسل کے منتخب ارکان چیئر مین کونسل ( وزیر اعظم پاکستان) سے حلف لیں گے۔آزادکشمیر کے آئین میں 13ویں ترمیم کے بعد کونسل کے انچارج وزیر کا بھی آئین میں کوئی ذکر نہیں ہے۔
اس طرح کونسل ارکان کا چیئر مین کونسل ( وزیر اعظم پاکستان) کے بجائے وزیر امور کشمیر سے حلف اٹھانا غیر آئینی اقدام ہے اور اسے عدالت میں چیلنج کیا جا سکتا ہے۔یہ ایسی آئینی ذمہ داری ہے جو چیئر مین کونسل ( وزیر اعظم پاکستان) کسی کو تفویض نہیں کر سکتا۔یہ بھی کہا جاتا ہے کہ آئین کے آرٹیکل56B(2) کے تحت حلف لینے کی ذمہ داری تفویض کی گئی ہے۔ آرٹیکل56B(2) میں impracticable کا لفظ استعمال ہوا ہے جس کے معنی ناقابل عمل ہونا ہے۔ جبکہ کونسل ارکان کے حلف لینے میں ایسی صورتحال نہیں تھی کہ جہاں چیئر مین کونسل( وزیر اعظم پاکستان) کا ان سے حلف لینا ناقابل عمل ہوتا۔
واپس کریں