مقبوضہ کشمیر،مرہامہ سنگم بجبہاڑہ میں انڈین فورسز پر کشمیری فریڈم فائٹرز کا حملہ
No image سرینگر۔ ضلع اننت ناگ کے علاقے مرہامہ سنگم بجبہاڑہ میں کشمیری فریڈم فائٹرز نے انڈین فورسز پر گھات لگا کر حملہ کیا جس دوران کئی منٹوں تک دو بدو گولیوں کا تبادلہ جاری رہا۔ انڈین فورسز نے علاقے کو محاصرے میں لے کر آپریشن شروع کیا تاہم مجاہدین حملے کے بعد نکلنے میں کامیاب ہوئے۔ فورسز کی طرف سے گائوں میں تلاشی آپریشن جاری ہے اور مزید کئی علاقوں کو محاصرے میں لے لیا گیا ہے۔ اس بیچ قاضی گنڈ کے متعدد علاقوں میں پچھلے تین روز سے فورسز کی جانب سے تلاشی آپریشن شروع کیا گیا ہے۔
انڈین فوج کے ایک سینئر آفیسر نے صحافیوں کو بتایا کہ مرہامہ سنگم بجبہاڑہ میں جنگجو مخالف آپریشن جاری ہے اور فوج نے مزید کئی علاقوں کو محاصرے میں لے کر مفرور عسکریت پسندوں کی تلاش شروع کی ہے۔ انہوں نے کہاکہ فائرنگ کے بعد عسکریت پسند پاس کے گائوں کی طرف نکل گئے جنہیں تلاش کرنے کی خاطر ڈرون کیمروں کی بھی خدمات حاصل کی گئی ہے۔ ادھر قاضی گنڈ کے کنڈ واری پورہ گاوں کو فورسز نے مصدقہ اطلاع موصول ہونے کے بعد محاصرے میں لے لیا۔ سیکورٹی فورسز نے مصدقہ اطلاع موصول ہونے کے بعد گائوں کو محاصرے میں لے لیا جس دوران ایک وسیع علاقے کی تلاشی لی گئی تاہم اس دوران کوئی قابلِ اعتراض شئے برآمد نہیں ہوئی۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ جنوبی کشمیر میں سرگرم مجاہدین اور ان کے مدد گاروں کے خلاف سیکورٹی ایجنسیوں نے بڑے پیمانے پر آپریشن شروع کیا ہے۔ درمیانی رات سے ہی جنوبی کشمیر کے مختلف اضلاع میں سیکورٹی فورسز گشت لگاتے ہیں جس دوران رہائشی علاقوں کی تلاشی بھی لی جاتی ہیں۔ فوج کے ایک سینئر عہدیدار نے بتایا کہ جنوبی کشمیر میں سرگرم عسکریت پسندوں اور ان کے اعانت کاروں کے خلاف بڑے پیمانے پر آپریشن شروع کیا ہے۔
واپس کریں