فوج کی سیاست میں مداخلت پر '' ٹروتھ کمیشن ' بنا نے کا مطالبہ۔رکن قومی اسمبلی محسن داوڑ کا 'پی ڈی ایم' کے جلسے سے خطاب
No image کراچی۔ اپوزیشن کی 11 جماعتوں کے اتحاد ' پی ڈی ایم' کے جلسے سے خطاب کرتے ہوئے ' پی ٹی ایم' کے رہنما،رکن قومی اسمبلی محسن داوڑ نے فوج کی سیاست میں مداخلت پر '' ٹروتھ کمیشن ' بنانے کا مطالبہ کیا ہے۔محسن داوڑ نے وزیراعظم عمران خان کو مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ ہم آپ سے مطالبہ کرتے ہیں کہ آپ آج ہی اعلان کریں کہ 1947 سے اب تک جو ہوا ہے ہم اس کے لیے ایک ٹروتھ کمیشن بناتے ہیں، جو آپ نے الزامات لگائے اس کی بھی تحقیقات کریں جو میاں صاحب نے الزامات لگائے ان کی بھی تحقیقات کریں۔
بی بی سی کے مطابق رکن قومی اسمبلی محسن داوڑ نے کہا کہ گوجرانوالا جلسے میں تقریر کے دوران سابق وزیراعظم نے جو الزامات عائد کیے ان کی تحقیقات ہونی چاہیے تھی لیکن ایسا نہیں ہوا، عمران خان نے موجودہ آرمی چیف پر لگے الزامات کی تحقیقات کرنے کی بجائے مزید جرنیلوں کو بھی اس میں شامل کر دیا اور یہ وضاحت نہیں کی کہ جو الزامات لگے ان میں کتنی صداقت ہے۔
محسن داوڑ نے وزیرستان کے علاقے خڑ قمر میں پیش آنے والے واقعے اور دہشت گردی کے خلاف جنگ کی تحقیقات کا مطالبہ کرتے ہوئے کہاکہ پتا چلایا جائے کہ کون اس جنگ سے مستفید ہوا۔انھوں نے جبری گمشدگیوں کے معاملے پر بھی تشویش کا اظہار کیا۔ انھوں نے دعوی کیا کہ فوج کی جانب سے کامیاب آپریشنز کے دعوے تو کیے گئے لیکن اب ایک مرتبہ پھر سے خیبرپختونخوا میں دہشتگردی واپس آ گئی ہے۔محسن داوڑ نے کہا کہ ہم یہ پیغام دینا چاہتے ہیں کہ ٹارگٹ کلنگ اور جھوٹی ایف آئی آر ہمیں ہمارے نظریات سے نہیں ہٹا سکتی ہے۔

واپس کریں