دہشت گردی کو جڑ سے اکھاڑ پھینکیں گے،شاہ محمود قریشی، شہزاد وسیم۔ پشاور دھماکہ دہشت گردی ختم کرنے کے دعویداروں کے منہ پہ طانچہ ہے۔مولانا فضل الرحمان
No image اسلام آباد۔ وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی اور سنیٹ میں قائد ایوان سینٹر شہزاد وسیم نے پشاور کے ایک مدرسے میں دہشت گردی کے واقعہ کی مذمت کی ہے اور دہشت گردی کو جڑ سے اکھاڑ نے کے عزم کا اظہار کیا ہے جبکہ اپوزیشن جماعتوں کے اتحاد ' پی ڈی ایم' کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کا کہنا ہے کہ پشاور دھماکہ دہشت گردی کے خاتمے کا دعوی کرنے والوں کے منہ پر طمانچہ ہے۔
وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے کہا کہ آج پشاور میں مدرسے کے معصوم بچوں کو نشانہ بنایا گیا، دہشتگردی سے جنگ میں پوری قوم مسلح افواج اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کے ساتھ ہے اورہم دہشت گردی کے عفریت کو جڑ سے اکھاڑ کر دم لیں گے۔ سینیٹ میں قائد ایوان سینیٹر شہزاد وسیم نے پشاور دھماکے کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا کہ دہشتگرد امن خراب کرنے کے اپنے مکروہ عزائم میں کبھی کامیاب نہیں ہوں گے۔ دھماکا شکست خوردہ عناصر کی بیمار ذہنیت کا عکاس ہے۔
اپوزیشن اتحاد پاکستان ڈیمو کریٹک موومنٹ ((پی ڈی ایم)اور جمعیت علمائے اسلام کے سربراہ مولانا فضل الرحمان نے پشاور دھماکے کی مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ جو کہتے ہیں دہشت گردی ختم ہوگئی، پشاور دھماکا ان کے منہ پرطمانچہ ہے۔سکھر میں میڈیا سے گفتگو میں مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ جو کہتے ہیں دہشت گردی ختم ہوگئی، پشاور دھماکا ان کے منہ پرطمانچہ ہے اور جو لوگ دھماکوں کی پیشگوئی کرتے ہیں، پہلے نظر ان کی طرف جائے گی۔
آج (منگل)صبح پشاور کے علاقے دیر کالونی میں کوہاٹ روڈ پر واقع مدرسے کے ہال میں دھماکے کے نتیجے میں کم از کم 8 طلبہ شہید اور112 سے زائد زخمی ہو ئے ہیں۔
واپس کریں