سوپورمیں بھارتی پولیس کی حراست میں نوجوان کی شہادت
No image بارہمولہ۔ مقبوضہ کشمیر کے سوپور قصبے میں بھارتی پولیس نے ایک دکاندار نوجوان کو عسکریت پسند کا معاون قرار دیتے ہوئے گرفتار کرنے کے بعد ہلاک کر کے اس کی لاش ایک جگہ پھینک دی۔شہید کئے جانے والے23 سالہ عرفان احمد ڈار ولد محمد اکبر ڈار ساکن صدیق کالونی سوپورکے اہل خانہ نے میڈیا کو بتایا کہ پولیس نے اسے گرفتار کرنے کے بعد ظالمانہ طور پر ہلاک کیا ہے۔اس کے بھائی نے بتایا کہ عرفان دکان چلاتا تھا۔پولیس کی طرف سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ عسکریت پسند کے معاون عرفان ڈار کی لاش کو تجر شریف میں ایک پتھر کی کان کے قریب برآمد کیا گیا جہاں وہ پولیس کی ایک چھاپہ مار ٹیم کو چکمہ دیکر رات کی تاریکی کا فائدہ اٹھا کر بھاگنے میں کامیاب ہوا تھا۔ سوپور میں موبائل انٹرنیٹ بند کر دیاگیا۔ سوپور میں واقعے کے خلاف سینکڑوں کی تعداد میں لوگوں نے احتجاج کیا جس دوران سکیورٹی فورسز اور احتجاجیوں کے درمیان جھڑپیں بھی ہوئیں۔
واپس کریں