ترکی میں سات شدت کے زلزلے سے متعدد عمارتیں تباہ،کم ازکم چار ترک شہری جاں بحق،120 زخمی ،سمندری پانی آبادیوں میں داخل
No image استنبول۔ ترکی میں جمعہ کو 7 درجے شدت کے زلزلے سے متعدد عمارتیں تباہ ہوگئیں جبکہ سمندر ی پانی کئی آبادیوں میں داخل ہو گیا۔تفصیلات کے مطابق زلزلے کا مرکز ازمیر صوبے کے ساحل سے سترہ کلومیٹر دور اور اس کی گہرائی 16 کلومیٹر تھی۔ترکی کے وزیر صحت کے مطابق زلزلے سے چار شہرجاں بحق اور 120 زخمی ہوئے ہیں۔ 38 ایمبولینسوں اور دو ہیلی کاپٹروں سمیت امدادی کارکنوں نے بچائو کی کاروائیاں شروع کر دی ہیں۔زلزلے سے سمندر میں اونچی لہریں پیدا ہوئیں اور سمندر کا پنی کئی شہری علاقوں میں داخل ہو گیا جس سے شہری آبادیوں میں کئی کئی فٹ پانی تیز رو سے بہنے لگا۔ ازمیر میں بیس عمارتیں زمین بوس ہونے کی اطلاع ہے۔ترکی کے ایجین کوسٹ پر 7 درجے شدت کے زلزلے نے علاقے کو لرزا کے رکھ دیا۔میڈیا کے مطابق زلزلے کے جھٹکے شمال مغربی مرمرا ریجن میں بھی محسوس کیے گئے۔ زلزلے کے جھٹکے یونان میں بھی محسوس کیے گئے۔بحیرہ ایجین میں موجود یونانی جزیرے ساموس پر اس زلزلے کے نتیجے میں کئی مکانات کو نقصان پہنچا جبکہ ساموس کے نائب ناظم کے مطابق کچھ عمارتیں زمین بوس بھی ہو چکی ہیں۔زلزلے سے ہونے والی تباہی کی اطلاعات ابھی آ رہی ہیں۔پاکستان نے ترکی میں زلزلے پر گہرے دکھ اور افسوس کا اظہار کرتے ہوئے مکمل تعاون کا اعلان کیا ہے۔
واپس کریں