ہندوستانی فوج کی گولہ باری اور فائرنگ سے آزاد کشمیر کا ایک شہری شہید،چھ زخمی،شہری املاک کا نقصان
No image راولپنڈی( کشیر رپورٹ) آج(جمعرات کو) لائین آ ف کنٹرول سے ہندوستانی فوج کی گولہ باری اور فائرنگ سے آزاد کشمیر کا ایک شہری شہید اور متعدد شہری ،جن میں خواتین اور بچے بھی شامل ہیں،زخمی ہوئے۔ابھی تک کی اطلاعات کے مطابق ہندوستانی فوج کی گولہ باری اور فائرنگ سے ایک بزرگ شہری شہید اور چھ شہری زخمی ہوئے ہیں۔اطلاعات کے مطابق حویلی کہوٹہ میں کنٹرول لائین کے قریب واقع تونگیر بازار کو ہندوستانی فوج نے گو لہ باری کا نشانہ بنایا جس سے ایک بزرگ شہری شہید ہوگیا۔ہندوستانی فوج نے آج سماہنی میں بھی سویلین آبادی پر گولہ باری اور فائرنگ کی جس سے دو خواتین سمیت چھ افراد زخمی ہوئے۔ سماہنی سیکٹر کی سول آبادی پر اندھا دھند مارٹر بمباری کے نتیجہ میں 2 خواتین سمیت 4 افراد زخمی گائوں گاہی میں فرزانہ بی بی زوجہ محمد اقبال عمر 40 سال طیبہ نورین زوجہ نوید اقبال عمر 20 سال ۔نوید اقبال ولد محمد اقبال عمر 23 سال سماہنی کے گائوں گاہی میں اپنے گھر پہ گرنے والے مارٹر گولے کے پھٹنے سے سے شدید زخمی ہوئے جن کو فوری ریسکیو کرتے ہوئے سماہنی سول اسپتال لایا گیا ابتدائی طبی امداد کے بعد بھمبر ڈسٹرکٹ اسپتال ریفر کر دیا جبکہ ایک نوجوان محمد عثمان ولد محمد رزاق ساکن سمرالہ معمولی زخمی ہوا گولہ باری کے دوران سول انتظامیہ متحرک رہی ۔گولہ باری سے شہری آبادی کی املاک کو بھی نقصان پہنچا جبکہ پالتو جانور بھی ہلاک ہوئے ۔
واپس کریں