چینی فوج نے چشول کے وسیع علاقے پر قبضہ کیا ہے اور یہ سلسلہ جاری ہے، لداخ ہل کونسل
No image سرینگر ۔لداخ ہل ڈیولپمنٹ کونسل کے ایک کونسلر نے اس بات کا انکشاف کیا ہے کہ چشول کے ایک وسیع رقبے پر چینی لبریشن آرمی نے قبضہ کیا ہے اور وہ مویشی چرانے والوں کو وہاں تک جانے کی اجازت نہیں دے رہے ہیں لداخ ہل ڈیولپمنٹ کونسل نے میڈیا کو بتایا کہ کہ چشول کا ایک بڑا رقبہ چینی لبریشن آرمی نے اپنے قبضے میں لے رکھا ہے ۔انہوں نے انکشاف کیا کہ چینی لبریشن آرمی کسی ایک جگہ قیام نہیں کرتی ہے بلکہ چشول کے علاقے میں وہ ہر دن نئے نئے پوسٹ قایم کرتی ہے ۔انہوں نے کہا کہ یہ سلسلہ گذشتہ کئی مہینوں سے جاری ہے ۔کونسلر نے کہا کہ اب جبکہ سردیوں کا موسم شروع ہوچکا ہے چینی لبریشن آرمی کی پیش قدمی کسی حد تک رک گئی ہے ۔یہ امر قابل ذکر ہے کہ پینگیانگ جھیل اور اس کے گرد و نواح میں چینی فوج اور بھارت کی فوج کے درمیاں ہوئی جھڑپ میں ہلاکتیں بھی ہوئی ہیں ۔ا س دوران بھارت اور چین کے درمیان فوجی کمانڈروں کی سطح پر مذاکرات کے آٹھ راونڈ ہوئے لیکن اس کے باوجود چینی فوج ابھی تک پیچھنے ہٹنے پر آمادہ نہیں ہوئی ہے ۔
واپس کریں