صدر بائیڈن نے وزیر خارجہ، ڈائریکٹر نیشنل انٹیلی جنس، سیکرٹری ہوم لینڈ سیکورٹی اور نیشنل سیکورٹی ایڈوائزر کے عہدوں کے ناموں کا اعلان کر دیا
No image واشنگٹن(کشیررپورٹ)امریکہ کے نئے صدر جو بائیڈن نے سیکرٹری آف سٹیٹ،اقوام متحدہ میں امریکی سفیر ،ڈائریکٹر نیشنل انٹیلی جنس ،سیکرٹری ہوم لینڈ سیکورٹی اور نیشنل سیکورٹی ایڈوائزر کے ایسے اہم عہدوں کے ناموں کا اعلان کر دیا ہے جس سے عالمی اور خطوں کی سیاست اور صورتحال پر گہرے اثرات مرتب ہوں گے۔ امریکہ کے نومنتخب صدر جو بائیڈن نے امریکہ کی نئی حکومت کے کابینہ کے ارکان کا تقرر شروع کر دیا ہے۔پہلے مرحلے میں چھ اہم عہدوں پر تعیناتی کا اعلان کیا گیا ہے۔ نو منتخب نائب صدر کمیلا ہیرس نے صدر جوبائیڈن کی کابینہ کے ارکان کا اعلان کیا۔نومنتخب صدر جو بائیڈن کے سیکرٹری آف سٹیٹ ( وزیر خارجہ) انتونی بلنکن ،جان کیری کلائیمیٹ نمائندے( کابینہ کی نئی تشکیل کردہ پوسٹ) ،لنڈا تھامس گرین فیلڈ اقوام متحدہ میں امریکہ کی سفیر،ایورل ہینس ڈائریکٹر نیشنل انٹیلی جنس ،الیجانڈرو میورکاس سیکرٹری ہوم لینڈ سیکورٹی اور جیک سلووان نیشنل سیکورٹی ایڈوائزر ہوں گے۔
نائب صدر کمیلا ہیرس نے بتایا کہ صدر جو بائیڈن نے ان سے کہا ہے کہ انہوں نے اس سوچ کے ساتھ کابینہ تشکیل دی ہے کہ وہ امریکہ کی عکاسی کرتی ہواور قوم کے لئے بہتر کام کر سکے اور اسی کے تحت کابینہ تشکیل دی گئی ہے۔جو بائیڈن نے مزید کہا کہ کابینہ کے ارکان کے انتخاب میں جمہوریت،انسانی حقوق اور قانون کی حکمرانی کے عہد کو اہمیت دی گئی ہے۔
ہوم لینڈ سیکورٹی کے نئے سربراہ الیجانڈرو میورکاس اہم عہدے پر فائز ہونے والے ایسے پہلے امریکی ہیں جو ایک مائیگرنٹ کے طور پر امریکہ آئے تھے جبکہ ایورل ہینس نیشنل انٹیلی جنس کی پہلی خاتون سربراہ ہیں۔تھامس گرین فیلڈ ڈپلومیسی کا عالمی تجربہ رکھتی ہیں اور اقوام متحدہ میں امریکہ کی نمائندگی کر چکی ہیں۔جان کیری کا نیا تشکیل عہدہ کلائمیٹ کے بحران کی اہمیت ظاہر کرتا ہے۔
اقوام متحدہ میں امریکی سفیر کا عہدہ پانے والی لنڈا تھامس نے اقوام متحدہ میں امریکہ کے کردار کے حوالے سے کہا کہ اقوام متحدہ کی صدر بائیڈن اور ہیرس انتظامیہ کی اپروچ کی نمائندگی ہو گی،انہوں نے کہا کہ '' امریکہ کا ملٹی نیشنل ازم اور جمہوریت کا وقت واپس آ گیا ہے''۔لنڈا تھامس نے کہا کہ اس کا مطلب یہ ہے کہ لوگوں کو اپنے تمام اختلافات پس پشت ڈالنے کی طرف لانا اور مکالمے اور تعاون کو فروغ دینا ہے۔
ایورل ہینس ڈائریکٹر نیشنل انٹیلی جنس نے کہا کہ وہ کبھی صدر کو سچ بتانے سے گریز نہیں کریں گی،چاہے ان کے لئے سہولت کا باعث ہو یا پریشانی کا۔انہوں نے کہا کہ انٹلیجنس کمیونٹی امریکہ کو ان خطرات سے نمٹنے کے لئے ناگزیر ہے جو صرف دہشت گردی ، سائبر ہیکنگ یا دیگر روایتی سمتوں سے نہیں ہیں۔ایورل ہینس نیویارک میں پیدا ہوئیں اور وکالت سے منسلک اور 'سی آئی اے' میں ڈپٹی ڈائریکٹر رہ چکی ہیں۔
نئے وزیر خارجہ انتونی بلنکن کے رشتہ دار ہنگری میں '' ہولو کاسٹ'' میں بچ گئے تھے۔انتونی بلنکن نے اپنے خاندان کے بارے میں بتانے کے بعد کہا کہ '' خدا امریکہ کی حفاظت کرے''۔جو بائیڈن نے انتونی بلنکن کے بارے میں کہا کہ وہ پہلے دن سے ہی کام کرنے کو تیار ہوں گے ،وہ امکانات کی طر دیکھنے والی شخص ہیں۔
واپس کریں