آزاد کشمیر کے علاقے سماہنی میں ہندوستانی فوج کی فائرنگ ،گولہ باری سے33سالہ شہری شہید
No image میر پور( کشیر رپورٹ) کشمیر کو غیر فطری اور کشمیریوں کو جبری طور پر تقسیم کرنے والی کنٹرول لائین پہ ہندوستانی فوج کی فائرنگ اور گولہ باری سے سماہنی کے ایک گائوں میں ایک جوان شہید ہو گیا۔ہندوستانی فوج نے بدھ کو ضلع بھمبر کے سب ڈویژن سماہنی میں فائرنگ اور گولہ باری کی جس سے خانیوالیاں گائوں کا 33سالہ شخص انصار شہید ہو گیا۔ وہ تین بیٹیوں کا باپ تھا۔انصار اپنے گھر کے قریب موٹر سائیکل پہ سوار تھا کہ اتنے میں وہ ہندوستانی فوج کی گولہ باری کا نشانہ بن گیا۔فوج کے شعبہ تعلقات عامہ ' آئی ایس پی آر' کے مطابق ہندوستانی فوج نے کنٹرول لائین پہ باغسر سیکٹر میں آزاد کشمیر کی شہری آبادی کو نشانہ بنایا ۔ہندوستانی فوج کی گولہ باری سے 33سالہ انصارگائوں گڑھی میں اپنے گھر کے قریب موٹرسائیکل پہ شہید ہوگیا،وہ تین بیٹیوں کا باپ تھا۔
واضح ہے تین روز قبل ہندوستانی فوج نے کنٹرول لائین کے قریب آزاد کشمیر کے ایک گھر کونشانہ بنایا جہاں شادی کی تقریب جاری تھی،ہندوستانی فوج کی کی فائرنگ اور گولہ باری سے چھ خواتین اور چار بچے شدید زخمی ہوگئے تھے۔
واپس کریں