بی جے پی حکومت کے لئے کشمیر کا مسئلہ سیاسی نہیں بلکہ مذہبی ہے، اسی لئےکشمیر کی ڈیموگرافی تبدیل کی جا رہی ہے،محبوبہ مفتی
No image سرینگر۔مقبوضہ جموں وکشمیر کے سابق وزیر اعلی، پی ڈی پی کی صدر محبوبہ مفتی نے کہا ہے کہ ہندوستان کی بی جے پی حکومت کے لئے کشمیر کا مسئلہ سیاسی نہیں بلکہ مذہبی ہے اور اسی لئے وہ کشمیر کی ڈیموگرافی تبدیل کرنے کے منصوبے پر کام کر رہی ہے۔محبوبہ مفتی نے کہا کہ پیپلز لائینس نے ڈسٹرکٹ ڈویلپمنٹ کونسل کے الیکشن میں شرکت کا فیصلہ اسی لئے کیا ہے تاکہ بی جے پی کے لئے میدان خالی نہ رکھا جائے، دفعہ 370کی بحالی خاطر پیپلز الائنس کا بنیادی مقصد ہے ۔ انہوں نے کہاکہ روشنی اسکیم کو گھوٹالہ قرار دے کر پھر ایک خاص طبقے کو نشانہ بنانا سمجھ سے بالا تر ہے۔ محبوبہ مفتی نے کہاکہ اگر یہ واقعی میں گھوٹالہ ہے تو پھر ایک ہی طبقے کے لوگوں کو کیوں نشانہ بنایا جارہا ہے ۔ محبوبہ مفتی نے کہاکہ پیپلز الائنس کے لیڈروں اور امیدواروں کو چنائو مہم سے روکا جارہا ہے۔
اس سے پہلے گزشتہ روز محبوبہ مفتی اور نیشنل کانفرنس کے عمر عبداللہ نے کہا تھا کہ ہندوستان کی بی جے پی حکومت ڈسٹرکٹ ڈویلپمنٹ کونسل میں دھاندلی کے لئے فوج کو استعمال کر رہی ہے،فوج نے ضلع شوپیاں کے متری بگ علاقے کو محاصرے میں لے لیا ہے اور جنگجوئوں کی موجودگی کے بہانے پر لوگوں کو ووٹ ڈالنے کے لئے باہر آنے کی اجازت نہیں دے رہے ہیں۔ انتخابات میں دھاندلیاں کرنے کے لئے مسلح افواج کو استعمال کیا جارہا ہے اور ایک مخصوص جماعت کو سپورٹ کیا جا رہا ہے ۔
واپس کریں