سال2020 ، مقبوضہ جموں وکشمیر میں ہندوستانی فوج کے ہاتھوں270 کشمیری شہیدہوئے
No image سرینگر(کشیر رپورٹ) مقبوضہ جموں و کشمیر میں سال2020 کے دوران 102جھڑپوں میں 227 فریڈم فائٹر شہید ہوئے جبکہ ہندوستانی فورسز کے 53 اہلکار ہلاک ہوئے۔ہندوستانی حکام کی طرف سے میڈیا کو فراہم اعداد و شمار کے مطابق اس عرصے میں 43 عام شہری ہندوستانی فورسز کے ہاتھوں شہید ہوئے۔ہندوستانی حکام کے مطابق گزشتہ ایک سال کے دوران 167 نوجوان مجاہدین میں شامل ہوئے جن میں سے 75 شہیداور49 گرفتار ہوئے جبکہ ان میں سے 43 بدستور ہندوستانی فورسز کے خلاف برسرپیکار ہیں۔
مقبوضہ کشمیر کے جنوبی اضلاع میںہندوستانی فورسز اور کشمیری فریڈم فائٹرز کے درمیان جھڑپوں کے زیادہ واقعات پیش آئے تاہم گزشتہ چند ماہ سے شمالی کشمیر میں بھی ہندوستانی فورسز کے خلاف حملوں میں تیزی آئی ہے۔
سال2020 میں تین کشمیری نوجوانوں کو ہندوستانی فوج کی طرف سے جعلی مقابلے میں ہلاک کئے جانے کا واقعہ بے نقاب ہوا جس سے دنیا بھر میں ہندوستان پر تنقید ہوئی اور اسی طرح ہندوستانی فوجیوں نے ایک بزرگ شہری کو کار سے اتار کر فائرنگ کر کے ہلاک کردیا اور پھر اس کے ساتھ موجود دو تین سال کے اس کے پوتے کو اس کی لاش پر بٹھا کر تصویریں بنائی گئیں۔ اس واقعہ سے بھی ہندوستانی فوج کے کشمیریوں کے خلاف بھیانک مظالم بے نقاب ہوئے اور دنیا بھر میں ہندوستان پر سخت تنقید کی گئی۔
واپس کریں