سلامتی کونسل کی کشمیر قرار دادوں پر عملدرآمد کرانا اقوام متحدہ کی ذمہ داری ہے، وزیر اعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر خان
No image مظفر آباد۔ آزادجموں و کشمیر کے وزیر اعظم راجہ محمد فاروق حیدر خان نے کہا کہ حق خودارادیت کشمیری عوام کا بنیادی حق ہے۔کشمیری عوام پاکستان کی سلامتی، سا لمیت، استحکام اور تکمیل پاکستان کیلئے اپنی جد وجہد جاری رکھیں گے اور کامیابی کے حصول تک یہ جد جہد جاری رہے گی۔ پاکستان اور آزاد کشمیر کے عوام اپنے مقبوضہ کشمیر کے عوام کی اخلاقی، سیاسی اور سفارتی امداد سے کبھی دستبردار نہیں ہونگے۔ مسئلہ کشمیر پر کشمیری عوام کا موقف بالکل واضح اور دو ٹوک ہے جس میں کوئی ابہام نہیں ہے،ان خیالات کا اظہا رانہوں نے 5جنوری یوم حق خودارادیت کے موقع پرپیغام میں کیا۔
وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر خان نے کہا کہ تقسیم ہند کے فارمولے کے تحت ریاستوں کا فیصلہ استصواب رائے کے ذریعے ہونا تھامگر بھارت کشمیریوں کو یہ حق دینے کے بجائے خود اس معاملہ کو اقوام متحدہ میں لے گیا اور کشمیریوں کو سلامتی کونسل کی قرارداد وں کے مطابق حق خوارادیت دینے کا وعدہ کیا۔ لیکن بعد کے واقعات شاہد ہیں کہ بھارتی حکمران اپنے وعدہ سے مکمل طور پرپھر گئے جس کے نتیجہ میں حق خودارادیت کیلئے تحریک کا آغاز ہوا جو آج بھی اسی تسلسل سے جاری ہے۔ بھارت نے گزشتہ تقریبا سات د ہائیوں سے کشمیریوں کو ان کے عالمی سطح پر مسلمہ پیدائشی حق حق خودارادیت سے محض طاقت کے بل بوتے پر محروم کر رکھا ہے۔ انہوں نے کہا اقوام متحدہ کو اپنی نصف صدی سے زائد زیر التوا مسئلہ کشمیر کے سلسلہ میں قراردادوں پر عملدرآمد کے لیے اپنا بھرپور کردار اداکرنا چاہیے تاکہ کشمیریوں کو ان کا حق خودارادیت مل سکے۔ پاکستان اور بھارت کے تعلقات اس وقت تک بہتر نہیں ہوسکتے جب تک مسئلہ کشمیر کا پائیدار حل تلاش نہیں کر لیا جاتا۔ بھارت کشیدگی اور ہٹ دھرمی کی پالیسی ترک کر کے مسئلہ کشمیر کے امن حل کے لیے بامقصد مذاکرات کرے۔ تاکہ کشمیریوں کی خواہشات کے مطابق مسئلہ کشمیر کا حل ممکن ہو سکے۔انہوں نے کہا کشمیر ی عوام اپنی جانوں کے نذرانے دیکر تحریک آزادی کشمیر کو زندہ رکھا ہوا ہے جو کامیابی سے ہمکنار ہو گی پاکستان کشمیریوں کی منزل ہے اور ہم یہ منزل حاصل کر کے رہیں گے۔
واپس کریں