مقبوضہ کشمیر کے لئے سب سے زیادہ قربانیاں نیلم ویلی کے عوام نے دی ہیں، وزیر اعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر خان
No image مظفر آباد۔ وزیر اعظم آزادجموں وکشمیرو صدرمسلم لیگ ن راجہ محمد فاروق حیدرخان نے کہاہے کہ نیلم ویلی کے ہزاروں لوگوں نے سیزفائر لائن پر مقبوضہ کشمیر کے عوام کیلئے قربانیاں دیں،آزادکشمیر میں سب سے زیادہ قربانیاں نیلم کے لوگوں کی ہیں،ہندوستان کی بزدل فوج نیلم میں معصوم لوگوں کو نشانہ بناتی ہے ، جتنا فنڈ نیلم کو دیا اتنا اپنے حلقے کو نہیں دیا،نیلم کے لوگ مجھے بہت عزیز ہیں۔گلگت بلتستان کا صوبہ بننا تحریک آزادی کشمیر کی پیٹھ میں چھرا گھونپنے کے مترادف ہے،84ہزار مربعہ میل کی ریاست ، سکڑ کر 5 ہزار مربع میل رہ گئی ہے آزادکشمیر کے عوام اس کے امین ہیں، اپنے آپ کو کمزور نہ سمجھیں اور نہ مایوس ہوں۔اگلا الیکشن اس بات پر ہوگا کہ آزادکشمیر کے عوام کس طرح زندگی گزاریں گے ، میں اذان دیتا رہوں گا، سردار عبدالقیوم نے کہا تھا کہ یاد رکھنا کہ اگر صوبوں کی بات ہوئی تو پھر آزادکشمیر کا رقبہ پاکستان کے کئی اضلاع سے کم ہے۔نہ ہی میں حضرت عمر ہوں اور نہ آپ اس دور کی رعایا حقائق کو مدنظر رکھیں،نہ آج قائد اعظم ہیں نہ ان کے ساتھی،قومی امور پر آج جو صورتحال ہے پہلے کبھی نا تھی اس پر بات کرنے کی ضرورت ہے، نیلم ویلی میں صرف 4 ارب روپے سے زائد کے ترقیاتی منصوبہ جات دیے 193 کلومیٹر سڑکوں کی تعمیر کیلئے دیے جو زمین پر نظرآرہے ہیں ، لائن آف کنٹرول پر شہید ہونیوالے افراد کے اہلخانہ کو ماہانہ 3 ہزار فی کس اپنے بجٹ سے دیے ، نیلم میں تاوبٹ تک سڑک اپنے بجٹ سے تعمیر کررہے ہیں ،ڈگری کالج شاردہ منظور ہوگیا ہے اس کی آسامیاں بھی ہوگئی ہیں،اپر نیلم موسم سرما میں تین ماہ بند رہتی تھی،نیلم کے لوگوں کی زندگی بہت مشکل تھی اس لیے ہم وہاں اعلی معیار کی سڑک بنا رہے ہیں تاکہ شدید موسم میں بھی رابطہ بحال رہے،اللہ کے فضل سے جو کامیابیاں ہم نے حاصل کیں اس کا کریڈٹ کارکنان کوجاتا ہے ، عوام اپنے ووٹوں کے اندراج میں بھرپور حصہ لیں، بوگس ووٹ کی نشاندہی کریں۔
ان خیالات کا اظہار صدر مسلم لیگ ن راجہ محمد فاروق حیدرخان نے مسلم لیگ ن نیلم کے ورکرز کنونشن سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر سیکرٹری جنرل مسلم لیگ ن سپیکر قانون ساز اسمبلی شاہ غلام قادر، وزراحکومت چوہدری محمد عزیز ،محترمہ نورین عارف، ڈاکٹر مصطفی بشیر،کرنل ریٹائرڈ وقار احمد نور ، سابق وزیر چوہدری محمد سعید، نسیم سرفراز، صاحبزادہ سلیم چشتی ودیگر بھی موجود تھے۔
راجہ محمد فاروق حیدرخان نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ وزیراعظم نے کہاکہ جتنا وقت ہم نے دیا اور کام کیا کسی اور نے نہیں کیا ، ہمارے دور میں جو کام ہوئے عوام اس کے ثمرات سے مستفید ہورہے ہیں ، کارکردگی کی بنیاد پر ہمار ا مقابلہ ماضی کی کسی حکومت سے نہیں کیا جاسکتا۔ انہوں نے کہاکہ بزدل ہندوستان نیلم سمیت نہتے لائن آف کنٹرول پر لوگوں کو نشانہ بناتا ہے ،نیلم ویلی کے ہزاروں لوگوں نے مقبوضہ کشمیر کے عوام کیلئے قربانیاں دیں،نیلم کے عوام کی قربانیاں رائیگاں نہیں جائیں گی ۔ وادی نیلم کے لوگوں کے ساتھ خصوصی لگا ہے ۔ مسلم لیگ ن کی حکومت نے وہاں ترجیحی بنیادوں پر کام کیا تاکہ نیلم کے عوام کی مشکلات کم ہوں ۔ نیلم کے عوام جنگلات کی کٹائی لکڑی کی سمگلنگ کے خلاف بھی اپنا کردار ادا کریں ۔انہوں نے کہاکہ گزشتہ ساڑھے چار سالوں کے دوران ہم نے خدمت کی، آج جو کارکنان اور عوام شکریہ ادا کررہے ہیں اس کا کریڈٹ محمد نوازشریف کو جاتا ہے ۔تیرویں ترمیم ،مالیاتی خودمختاری کے لیے شاہد خاقان عباسی مفتاح اسماعیل کے شکر گزار ہیں۔ انہوں نے کہاکہ بڑے بڑے لوگ آئے مگر ختم نبوت قانون جیسا عظیم کام ہمارے اعمال میں آیا۔ہم نے ایک پالیسی کے مطابق کام کیا ، تیرہویں آئینی ترمیم کے ثمرات آزادکشمیر کے عوام آج محسوس کررہے ہیں ، ہم آج مالیاتی طور پر خودکفیل ہیں۔ انہوں نے کہاکہ بڑے بڑے لیڈر ہیں جو اپنے آپ کو بہت بڑا کہلاتے ہیں مگر بدقسمتی سے اپنے ضلعوں سے باہر نہیں نکلتے۔ایک وقت تھا جب سوشل میڈیا نہیں تھا اس وقت سیاست آسان تھی آج سوشل میڈیا کی وجہ سے بہت مشکل ہے ۔ وزیراعظم نے کہاکہ اپنی کارکردگی کی بنیاد پر الیکشن میں جائیں گے ، عوام فیصلہ کرینگے کہ ہماری کارکردگی کیسی رہی، اللہ کے فضل اور اس کی نصرت سے دوبارہ حکومت بنائیں گے اور تعمیر وترقی کا سفر جاری رہے گا۔

واپس کریں