مقبوضہ کشمیر ،ہندوستانی فورسز سے جھڑپ میں ایک مجاہد آزادی شہید، دو مظاہرین زخمی
No image سرینگر۔ مقبوضہ کشمیر کے جنوبی ضلع شوپیاں میں ہندوستانی فورسز کے ساتھ جھڑپ میں ایک مجاہد آزادی شہید ہو گیا، اس موقع پر فورسز نے مظاہرین پہ فائرنگ کی جس سے دو نوجوان پیلٹ لگنے سے زخمی ہو گئے،ایک فورسز اہلکار بھی جھڑپ میں زخمی ہوا۔ پولیس کے مطابق شہید ہونے والے مجاہد کا نام ولائت عرف سجاد افغانی ہے۔ مجاہد کی شہادت کے اعلان پر علاقے کے نوجوان بڑی تعداد میں جھڑپ کے مقام کی طرف بڑہنے لگے جس پر ہندوستانی فورسز نے ان پہ فائرنگ شروع کر دی۔ مظاہرین میں شامل دو نوجوان پیلٹ لگنے سے شدید زخمی ہوگئے۔ فورسز کا ایک اہلکار بھی جھڑپ کے دوران زخمی ہوا۔زخمی ہونے والے نوجوانوں کی آنکھیں پیلٹ( چھرے) لگنے سے بری طرح متاثر ہوئی ہیں۔
دریں اثناء آئی جی پولیس وجے کمار نے صحافیوں کو بتایا کہ سرینگر میں نو مجاہد آزادی سرگرم ہیں۔ پولیس کے مطابق ان میں وسیم قادر، شاہد خورشید،عرفان احمدصوفی،بلال احمد بٹ ،محمد یوسف ڈار ،محمد عباس شیخ اور عبید شفیع شامل ہیں۔پولیس کے مطابق سرینگر میں سرگرم ان مجاہدین نے فورسز کے خلاف پسٹل اور ہینڈ گرینیڈ سے حملے کرنے کی حکمت عملی اپنائی ہے۔
واپس کریں