اقوام متحدہ کشمیریوں پر مظالم رکوانے کے لئے عملی کردار ادا کرے، وزیر اعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر خان
No image اسلام آباد۔ وزیر اعظم آزادجموں وکشمیر راجہ محمد فاروق حیدرخان نے کہا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں انسانیت سسک رہی ہے،مقبوضہ کشمیر میں ہندوستان کے فوجی محاصرے کو آج588دن ہو گئے ہندوستانی مظالم سے انسانیت شرما گئی ہے اقوام متحدہ خاموش تماشائی بننے کے بجائے کشمیریوں پر مظالم رکوانے کیلئے عملی کردار ادا کرے، ہندوستان کشمیریوں کی نسل کشی کا سلسلہ تیز کر کے وہاں آبادی کا تناسب بدلنے میں مصروف ہے اور مسلسل اقوام متحدہ کی قراردادوں کی خلاف ورزی اور بین الاقوامی قوانین کو روند رہاہے،ہندوستان کی قابض فوج آئے روز کشمیریوں کی املاک کو تباہ کررہی کررہی ہے، کشمیریوں کے گھروں کو جلایا جارہا ہے، کشمیری نوجوانوں کو چن چن کر شہید کیا جارہا ہے، گزشتہ روز بھی شوپیاں میں ایک بے گناہ کشمیری نوجوان کو شہید کر دیا گیا۔ عالمی برادری کشمیریوں کا قتل عام رکوانے کیلئے اپنا کردار ادا کرے۔ اقوام متحدہ اپنی قراردادوں پر عملدرآمد کروائے۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے اپنے ایک بیان میں کیا۔
وزیر اعظم آزادکشمیر نے کہاکہ ہندوستان کشمیریوں پر انسانی تاریخ کے بدترین مظالم ڈھا کر انسانیت کی توہین کررہا ہے، ہندوستان مقبوضہ کشمیر کو فوجی محاصرے میں رکھ مقبوضہ وادی میں مسلم اکثریت کو اقلیت میں بدلنے کیلئے باہر سے انتہا پسندہندوں اور آر ایس ایس کے کارکنوں کو لاکر آباد کررہا ہے۔ ہندوستان مسلسل اقوام متحدہ کی قراردادوں کی خلاف ورزی کررہا ہے۔ انہوں نے کہاکہ ہندوستان نے کشمیریوں کی نسل کشی کا سلسلہ تیز کر دیا ہے اور آئے روز بے گناہ کشمیریوں کو شہیدکردیا جاتا ہے۔ کشمیری عورتوں کی بے حرمتی کی جاتی ہے اور نوجوانوں پر تشدد کیا جاتا ہے۔ مقبوضہ کشمیر میں گیارہ ہزار سے زائد خواتین کی آبرو ریزی کی گئی ہے، بائیس ہزار کشمیری خواتین بیوہ ہوئی ہیں جبکہ ساڑھے چھ ہزار سے زائد گمنام قبریں ہیں، معصوم بچے بھی ہندوستان کے جبر اور بربریت سے محفوظ نہیں۔ انہوں نے کہاکہ ان تمام ترمظالم کے باوجود کشمیریوں کے پائیہ استقلال میں لغزش نہیں آئی اور وہ اپنی منزل کے حصول تک قربانیوں کا سلسلہ جاری رکھیں گے۔ وزیر اعظم نے کہاکہ کشمیریوں کے عزم و ہمت کو سلام پیش کرتا ہوں جس طرح وہ ہندوستان کی بدترین جارحیت اور استبداد کا مقابلہ کررہے ہیں۔ انہوں نے کہاکہ مسئلہ کشمیر کو اقوام متحدہ کی قراردادوں کے مطابق حل کیا جانا ناگزیر ہے، اقوام متحدہ، مہذب دنیا اور عالمی ادارے اس حوالہ سے اپنا کردار ادا کریں۔ انہوں نے کہا کہ ہندوستان ایک انتہا پسند ملک ہے جس نے پوری دنیا کا امن دا ئوپر لگایا ہواہے۔
واپس کریں